اعلان داخلہ

تاریخ آغاز داخلہ : شعبہ درس نظامی کے لئے تمام درجات میں قدیم و جدید داخلہ ان شاء اللہ تعالیٰ بروزپیر۷؍شوال ۱۴۴۳ھ (۹؍مئی ۲۰۲۲ء) سے شروع ہوگا۔حسب معمول دارالعلوم کی مسجد کے قریب قائم کردہ استقبالیہ کیمپ سے اجراء فارم ان شاء اللہ تعالیٰ مذکورہ تاریخ سے کردیا جائے گا، اسی استقبالیہ کیمپ سے داخلہ سے متعلق تمام معلومات حاصل کی جاسکتی ہیں۔ ہر ہر درجہ میں جدید داخلہ گنجائش کے مطابق کیا جائے گا۔اس سال جدید داخلوں کی تعداد محدود ہے ۔ جس کی تفصیل استقبالیہ کیمپ سے مل جائے گی۔ جدید طلبہ مقررہ تاریخ داخلہ سے پہلے آنے کی زحمت نہ کریں۔
شرائط: ٭…ہر جدیدامیدوار کا پہلے تحریری امتحان لیا جائے گا، اس میں کامیاب ہونے والے طلبہ کا تقریری جائزہ ہوگا۔ دونوں جائزوںمیں کامیابی داخلے کیلئے ضروری ہوگی۔ مختلف درجات کے تحریری امتحانات ۱۰؍شوال سے ۱۲؍شوال کی مختلف تاریخوں میں ہوں گے جس کی تفصیلی اطلاع استقبالیہ کیمپ سے مل جائے گی۔
٭…ان جدید طلبہ کو تحریری امتحانِ داخلہ میں شرکت کا اہل سمجھا جائے گا جن کے سابقہ اکثر وفاقی سالوںکے نتائج ممتاز یا ۷۰ فیصد ہوں۔
٭…داخلہ کے تمام خواہشمند طلبہ اپنی سابقہ اصل تعلیمی اسناد اور کشف الدرجات ساتھ لائیں۔
٭…دورۂ حدیث شریف میں داخلہ کیلئے دیگر شرائط کے ساتھ ساتھ یہ بھی شرط ہے کہ طالب علم وفاق المدارس کا دورۂ حدیث شریف کا سالانہ امتحان دینے کا اہل ہو یعنی سابقہ وفاقی درجات کا امتحان دے کر کامیاب ہوچکا ہو۔
٭…اسباق ان شاء اللہ تعالیٰ بروزِ بدھ ۱۶؍ شوال ۱۴۴۳ھ (۱۸مئی ۲۰۲۲ء)سے شروع ہونا متوقع ہیں۔
٭…دارالقرآن میں قاعدہ وناظرہ میں جدید داخلوں کی رجسٹریشن ۱۷؍رمضان المبارک ۱۴۴۳ھ سے ۱۹؍ رمضان المبارک بروز منگل ، بدھ ، جمعرات تک کی جائے گی اور داخلہ حسب گنجائش ہوگا۔
٭…دارالقرآن میں داخلہ لینے والے کسی بھی طالب علم کو اقامتی داخلہ نہیں دیا جائے گا۔

٭…۱۴؍سال سے کم عمر رکھنے والے جدید طالب علم کو اقامتی داخلہ نہیں دیا جائے گا۔
٭…جامعہ کے طلبہ کے لئے تصویری موبائل فون کا استعمال بالکلیہ ممنوع ہے ،نہ درسگاہ میں اس کی اجازت ہے اور نہ ہی دارالاقامہ میں،البتہ سادہ موبائل بغیر میموری کارڈ کے ، غیر تعلیمی اوقات میں بوقت ضرورت استعمال کرنے کی اجازت ہے ، لیکن درسگاہوں میں سادہ موبائل لانابھی ممنوع ہے ۔اسی طرح دیگر ایسی چیزیں جو طلبہ کے علمی مشاغل میں مخل ہوتی ہیں مثلاً ریڈیو، ٹیپ ریکارڈر، وغیرہ ان پربھی دارالطلبہ کی حدود میں پابندی عائد ہے۔ اس لئے آنے والے طلبہ یہ چیزیں ساتھ نہ لائیں۔
٭… دورانِ تعلیم عصری مضامین کے امتحان کے لیے خصوصی اجازت ضروری ہے ۔
٭…کسی بھی طالب علم کو داخلہ نہ دینے کی وجوہ کا اظہار دارالعلوم کے ذمہ نہیں۔
وضاحت نمبر۱
ان شاء اللہ تعالیٰ دارالعلوم گلشن اقبال کی درس نظامی شاخ کیلئے بھی جدید داخلہ مذکورہ بالاتاریخ سے شروع ہوگا۔
وضاحت نمبر ۲
پاکستانی شہریت نہ رکھنے والے شائقین داخلہ کے لئے پاکستانی تعلیمی ویزا (Study Viza)ہونا ضروری ہے ، اس کے بغیر داخلہ کے لئے رجوع نہ فرمائیں ۔
وضاحت نمبر ۳
داخلہ کے لئے جدید طلبہ جامعہ دارالعلوم کراچی کے داخلہ کی شرائط کے مطابق اپنی درخواستیں اپنے سابقہ نتائج کی کاپی کے ساتھ ڈاک یا ای میل کے ذریعہ ۲۵؍رمضان تک بھجواسکتے ہیں۔
ضروری اطلاع
وبائی صورتحال کے پیش نظر داخلہ کارروائی سے متعلق مندرجہ بالا امور میں کوئی تحدید یا ترمیم کرنی پڑی تو اس کا بھی اعلان کردیا جائے گا ۔ بیرون کراچی کے طلبہ تازہ ترین صورتحال معلوم کئے بغیر سفر نہ فرمائیں۔
عمید الدراسات جامعہ دارالعلوم کراچی

وضاحت:۔ ان شاء اللہ تعالیٰ دارالعلوم گلشن اقبال کی درس نظامی شاخ کیلئے بھی جدید داخلہ مذکورہ بالاتاریخ سے شروع ہوگا۔

٭٭٭٭٭٭

فون نمبر : 021-35049774-5-6
ای میل ایڈریس talimaat@gmail.com

talimaat@darululoomkarachi.edu.pk

 


ضروری شرائط برائے داخلہ غیر ملکی طلبہ

 

۱۔ جامعہ دار العلوم کراچی کے کسی بھی تعلیمی شعبہ میں داخلہ کیلئے دیگر شرائط کے علاوہ سب سے پہلی شرط یہ ہے کہ طالب علم کے پاس پاکستان میں رہائش کی اجازت اور اسٹڈی ویزا موجود ہو۔

۲۔ درجہ عربی سال اول میں داخلہ کیلئے میٹرک یا اسکے مساوی استعداد کا حامل ہونا ضروری ہے۔

۳۔ اقامتی داخلہ کے لئے کم از کم عمر ۱۴ سال ہونا ضروری ہے۔ (داخلہ کی منظوری کے بعد حسبِ خواہش دار الاقامہ میں رہائش دیجاتی ہے۔)

٤۔ البتہ احاطہ دار العلوم میں کرایہ کے مکان کا انتظام ادارہ کے ذمہ نہیں ہے۔اگر بسہولت میسر ہو تو کرایہ پر اسکی شرائط کے ساتھ حضرت رئیس الجامعہ مدظلہم کی خصوصی اجازت سے دیا جاسکے گا۔ جسکی کارروائی داخلہ ملنے کی صورت میں کیجاسکے گی۔

۵۔ اگر کسی کے پاس دوہری شہریت ہو تو اسکا داخلہ پاکستانی شناختی کارڈ کی بنیاد پر ہوسکے گا۔ ادارہ امور تعلیمات جامعہ دار العلوم کراچی


اعلان بابت جدید داخلے برائے العالمیۃ الاولی (درجہ سابعہ) و العالمیۃ السنۃ الثانیۃ (درجہ دورۂ حدیث) امیدوار ان داخلہ کو حسب ذیل شرائط کی روشنی میں داخلہ فارم جاری کیا جائے گا۔

۱ –      سابقہ داجہ میں حاصل کردہ نمبر اسی(۸۰ )فیصد سے کم نہ ہوں۔

۲-     امیدوار داخلہ مصدقہ کشف الدرجات کا حامل ہو۔

۳-     قومی شناختی کارڈ یا فارم  ب کا بھی حامل ہو۔

۴-     تحریری امتحان کے بعد باقاعدہ تقریری جائزے میں بھی کامیاب ہو۔

۵-     بیرون ملک سے آنے کی صورت میں طالب علم نے باقاعدہ تعلیمی ویزہ حاصل کیا ہو۔


حسب معمول اس سال بھی جامعہ دار العلوم کراچی میں درجہ اُولیٰ تا درجہ سادسہ داخلہ کیلئے میٹرک پاس ہونا شرط ہے

البتہ درجہ خامسہ و سادسہ میں ممتاز طلبہ کیلئے داخلہ کی حد تک کچھ رعایت ہوسکتی ہے مگر داخلہ کے بعد جامعہ کی دورہ حدیث کی سند میٹرک پاس کرلینے پر موقوف رہے گی۔


شعبہ درجہ ناظرہ وقاعدہ میں داخلہ 

 

جامعہ دارالعلوم کراچی کے شعبہ درجہ ناظرہ وقاعدہ میں نئے تعلیمی سال ٤٤ ۔  ۱٤٤۳ھ کے جدید امیدوار طلبہ کا داخلہ و جائزہ ان شاء اللہ تعالیٰ

بروز بدہ ۱۷ رمضان المبارک ۱٤٤۳ھ سے ۱۹رمضان المبارک ۱٤٤۳ھ کو ہوگا

بمقام دارالقرآن جامعہ دارالعلوم کراچی

تمام امید وار داخلہ اور ان کے سرپرست حضرات ، مذکورہ بالا تاریخ اور وقت کا خیال رکھتے ہوئے ــ درخواست برائے داخلہ دفتر دارالقرآن سے وصول فرمائیں۔

شرائط داخلہ

٭      داخلہ کے وقت عمر ۶ سے کم اور ۹ سال سے زائد نہ ہو ۔

٭      درخواست ِ داخلہ کے ساتھ نادراکا ب فارم اور ایک عدد تصویر لازمی منسلک کریں۔

٭      یہ داخلہ تکمیل حفظ القرآن الکریم تک کے لئے ہے، اس لئے ۶ سال کی عمر طالب علم کا ، سمجھنے ، سیکھنے بالخصوص ذہنی سطح و یادداشت جیسی صلاحیتوں کا جائزہ ہوگا اور ۶ سال سے زائد عمر کا سابقہ تعلیم کا جائزہ ہوگا۔

٭      داخلہ کے خواہشمند طلباء جائزے میں کامیابی کے بعد بشرط گنجائش داخلہ کے مستحق ہوں گے۔

٭      داخلہ فیس /=۵۰۰ روپے ہوگی ۔

٭      درجہ ناظرہ و حفظ میں داخلہ غیر رہائشی ہوگا۔

٭      امسال داخلہ صرف درجہ ناظرہ وقاعدہ میں ہوگا۔


التخصص فی الافتاء کا داخلہ

 

جامعہ دارالعلوم کراچی میں درجہ تخصص فی الافتاء میں داخلے کے خواہش مندطلبہ کو اطلاع دی جاتی ہے کہ اس سال ان شاء اللہ بروزبدھ غالباً ۱۶؍شوال (۱۸؍ مئی ۲۲ ۲۰ء) کو داخلے کی درخواستیں وصول کی جائیں گی اور امیدواروںکا تحریری اورتقریری امتحان بھی ہوگا۔ ان دونوں امتحانات کے نتیجہ میں جو طلبہ کامیاب ہوں گے ان میں سے پندرہ طلبہ درجۂ کامیابی کی ترتیب سے داخلے کیلئے منتخب کئے جائیں گے۔ امیدوار حضرات مندرجہ ذیل امور ذہن نشین فرمالیں:۔

٭… صرف وہ طلبہ رجوع کریں جو وفاق المدارس یا کسی مستند دینی درسگاہ سے دورۂ حدیث کے امتحان میں ممتاز درجے میں کامیاب ہوئے ہوں۔ اس سے کم درجے میں کامیاب ہونے والے طلبہ رجوع نہ فرمائیں۔

٭…تخصص میں داخلے کیلئے منگل۱۵؍شوال۱٤٤۳ھ سے پہلے تشریف نہ لائیں۔ اس سے قبل دارالعلوم ان کے قیام و طعام کا ذمہ دار نہ ہوگا۔

٭…اردو اور عربی رسم الخط میں صاف ستھری تحریر بھی داخلے کیلئے ضروری ہے، جن طلبہ کا خط خراب ہو وہ داخلے کیلئے رجوع نہ فرمائیں۔

٭…دوران تعلیم کسی انجمن یا جماعت سے کسی بھی قسم کا تعلق ممنوع ہوگا ،نیز تخصص کے علاوہ کسی اور امتحان کی تیاری کی اجازت نہیں ہوگی۔ مخصوص حالات میں صدر جامعہ دارالعلوم کراچی مدظلہم سے تحریری اجازت لینا ضروری ہوگا۔

٭…یہ بھی واضح رہے کہ تخصص فی الافتاء میں داخلہ کے بعد تین سالہ نصاب پورا کرنا لازم ہوگا۔

٭… داخلہ کے خواہشمند طلبہ کے اعمال و اخلاق، ان کی تہذیب و شائستگی اور وضع قطع کا ایک عالم دین کے مطابق ہونا لازمی ہے۔

٭…امتحان داخلہ مندرجہ ذیل کتب و مضامین میں لیا جائے گا:

٭…مشکوٰۃ المصابیح، ہدایہ کامل، نورالا نوار، (بحث کتاب و سنت) سراجی، شرح العقائد، اور ترجمہ قرآن

٭…تقریری امتحان میں عبارت نحوی و صرفی اعتبار سے درست پڑھنے کی صلاحیت کو خاص طور پر ملحوظ اور تحریری امتحان میں سلیقہ ٔ تحریر کو مدنظر رکھا جائے گا۔

٭…درجہ تخصص کے جو طلبہ مذکورہ بالا شرائط کے تحت اعلیٰ درجے میں کامیاب ہوں گے ان کو قیام و طعام اور تین ہزارچھ سوروپے ماہانہ وظیفے (جس میں ناشتہ کا وظیفہ بھی شامل ہے) کے ساتھ داخلہ دیا جائے گا۔

عمید الدراسات

جامعہ دارالعلوم کراچی


التخصص فی الدعوۃ والارشاد میں داخلہ

 

جامعہ دارالعلوم کراچی میں درجۂ ’’التخصص فی الدعوۃ والارشاد‘‘ کے سال اول کیلئے تعلیمی سال ٤٤-۱٤٤۳ھ میں جدید داخلے کئے جائیں گے۔

اس تخصص کا مقصد یہ ہے کہ اچھی استعداد رکھنے والے فارغ التحصیل علماء کو معاصر ضرورتوں کے مطابق مؤثر دعوت و تبلیغ اور اصلاح وارشاد کے کام کیلئے تیار کیا جائے۔ چنانچہ اس تخصص کیلئے دو سالہ جامع نصاب مقرر کیا گیا ہے جس میں ایک مؤثر داعی و مبلغ کیلئے مطلوب ضروری معلومات اور عملی تربیت شامل ہے ،نیز اردو کے علاوہ عربی اور انگریزی زبان کی تعلیم اور ان تینوں زبانوں کی تحریر و تقریر کی مشق پر خصوصی توجہ دیجاتی ہے تاکہ اس تخصص سے فارغ ہونے والے حضرات بیرون ملک بھی حسبِ ضرورت عربی اور انگریزی زبانوں میں دعوت و اصلاح کا کام وہاں کی ضروریات کے مطابق بحسن و خوبی انجام دے سکیں۔

شرائط داخلہ

(۱) کسی معروف دینی درسگاہ سے دورہ حدیث میں درجہ ’’ممتاز‘‘ یا کم از کم ’’۷۰ فیصد ‘‘ نمبر لے کر کامیابی کی سند کا حامل ہو

(۲) فقہ اور علم کلام سے اچھی مناسبت ہو۔

(۳) تحریر صاف ستھری اور اردو، عربی اور انگریزی میں سے کسی ایک زبان میںا چھی تحریر لکھنے کی صلاحیت ہو۔

(۴) تجوید کی اچھی استعداد ہو۔

(۵)کم از کم میٹرک معیاری درجہ میں پاس کیا ہو یا اس کے مساوی استعداد کی انگریزی سے واقفیت ہو۔

وضاحت نمبر۱:داخلہ کے لئے تحریری امتحان داخلہ اور زبانی جائزہ لیا جائے گا۔ ان دونوں میں کامیابی کے بعد ہی داخلہ دیا جاسکے گا۔

وضاحت نمبر۲:اس درجے میں زیادہ سے زیادہ بیس (۲۰) طلبہ کو داخل کیا جائے گا۔

امتحانِ داخلہ میں کامیابی کے نمبروں کو انتخاب کا معیار بنایا جائے گا۔

امتحان داخلہ ان شاء اﷲ بروزبدھ ۱۶؍ شوال ۱۴۴۳ھ (۱۸؍مئی ۲۰۲۲ء) کو جامعہ دارالعلوم کراچی میں منعقد ہوگا۔ جو طلبہ مندرجہ بالا شرائط کے تحت اعلیٰ درجے میں کامیاب ہوں گے، ان کو قیام وطعام اور مبلغ تین ہزارچھ سوروپے ماہانہ وظیفے (جس میں ناشتہ کا وظیفہ بھی شامل ہے) کے ساتھ داخلہ دیا جائے گا، درخواستیں سند کی فوٹو کاپی کے ساتھ۱۲؍شوال سے پہلے دارالعلوم بنام ادارہ امورتعلیمات جامعہ دارالعلوم کراچی ارسال کردی جائیں۔ اصل سند اپنے ہمراہ لانا ضروری ہے۔


التخصص فی القرا ء ات میں داخلہ

 

جامعہ دارالعلوم کراچی میں درجۂ ’’التخصص فی القراء ات‘‘ کے سال اول کیلئے تعلیمی سال ٤۳-۱٤٤۲ھ میں جدید داخلے کئے جائیں گے۔

شرائط داخلہ

٭ کسی معروف دینی درسگاہ سے دورۂ حدیث میں ممتاز کامیابی کی سند کا حامل ہو۔

٭ جیّد حافظ اور تجوید بروایت حفص پڑھا ہوا ہو۔

٭ شاطبیہ ودرّہ یعنی قراء ات عشرہ سے فارغ ہو، اور رائیہ پڑھی ہو۔

وضاحت

٭ داخلہ کے لیے تحریری امتحان اور زبانی جائزہ لیا جائے گا، ان دونوں میں کامیابی کے بعد ہی داخلہ دیا جاسکے گا۔

٭ اس درجے میں زیادہ سے زیادہ ۲۰ طلبہ کو داخلہ دیاجائے گا، زیادہ درخواستوں کی صورت میں امتحان داخلہ میں کامیابی کے نمبروں کو انتخاب کا معیار بنایاجائے گا۔

٭ درجہ تخصص فی القراء ات کے جو طلبہ مذکورہ بالا شرائط کے تحت اعلیٰ درجے میں کامیاب ہوں گے ان کو قیام وطعام اور مبلغ تین ہزار ایک سو روپے ماہانہ وظیفے(جس میں ناشتہ کا وظیفہ بھی شامل ہے)کے ساتھ داخلہ دیا جائے گا۔امتحان داخلہ ان شاء اﷲ بروزبدھ ۱۶؍شوال۱٤٤۳ھ (۱۸؍ مئی ۲۲ ۲۰ء) کو جامعہ دارالعلوم کراچی میں منعقد ہوگا۔


درجہ تجوید للعلماء میں داخلہ

 

جامعہ دارالعلوم کراچی میں تعلیمی سال٤۳ ۔۱٤٤٤ھ میں وفاق المدارس العربیہ پاکستان کی مجلس عاملہ کے طے کردہ نصاب ’’تجوید برائے علماء‘‘ میں جدید داخلے دئیے جائیں گے

شرائط داخلہ

٭ ناظرہ قرآن کریم صحیح تلفظ اور روانی کے ساتھ پڑھنا آتا ہو، حافظ قرآن کریم ہونا قابل ترجیح ہوگا۔

٭ کسی مستند دینی درسگاہ سے درس نظامی کی تکمیل کم از کم ۵۰ فیصد ،درجہ جید کے ساتھ کامیاب ہوا ہو۔

٭ درجہ ممتاز میں کامیابی اور وفاق المدارس کی سند کاحامل ہونا قابل ترجیح ہوگا۔

 

وضاحت

٭ کم از کم تین اور زیادہ سے زیادہ ۲۰ شرکاء کو داخلہ دیا جائے گا، امتحان داخلہ میں منتخب ہونے والے طلبہ کو قیام وطعام کی سہولت اورتین ہزار ایک سوروپے وظیفہ(جس میں ناشتہ کا وظیفہ بھی شامل ہے) بھی دیا جائے گا۔

٭ یومیہ درس جامعہ کے تعلیمی چھ گھنٹوں کے مطابق ہوگا جس میں حاضری کی پابندی ضروری ہوگی، دوران سال ۵۰ گھنٹوں کی غیر حاضری پر وظیفہ سوخت ہوجائے گا اور ۱۰۰ گھنٹے کی غیر حاضری پر سالانہ امتحان میں شرکت سے روکا جاسکتا ہے۔ امتحان داخلہ ان شاء اللہ بروز بدھ ۱۶ شوال ۱٤٤۳ ھ (۱۸ مئی ۲۰۲۲ء) کو ہوگا۔

( مزید معلومات کے لیے ادارہ امور تعلیمات سے رجوع کریں)


درجۂ ثالثہ قسم القراء ات میں داخلہ

 

جامعہ دارالعلوم کراچی میں درجہ ثالثہ ’’قسم القراء ات ‘‘کے لیے بھی تعلیمی سال ٤۱ ۔۱٤٤۰ھ میں جدید داخلے دئیے جائیں گے

شرائط داخلہ

٭ درجۂ ثانویہ عامہ، امتیازی نمبروں کے ساتھ پاس کیا ہو۔

٭ جیّد حافظ اور تجوید بروایت حفص پڑھا ہو۔٭ میٹرک پاس ہو۔

 

وضاحت

٭ درجۂ ثالثہ تا درجہ سادسہ درسِ نظامی کی تعلیم کے ساتھ ساتھ قراء ات عشرہ بطریق شاطبیہ ودرّہ مکمل کرائی جائے گی۔اور رسم عثمانی کی بھی تعلیم دی جائے گی۔


مدرسۃ البنات جامعہ دار العلوم کراچی میں تعلیمی سال٤٤ -۱٤٤۳ھ

کیلئے درسِ نظامی و دراساتِ دینیہ کے داخلہ کا آغاز ان شاء اللہ بروز پیر ۷؍ شوال؍ ۱٤٤۳ھ مطابق ۹ ؍مئی ؍۲۰۲۲ء سے ہوگا۔

نوٹ: داخلہ لینے والی طالبات مدرسۃ البنات زنانہ دفتر سے صبح ۰۰:۸ بجے سے رجوع کریں، (میٹرک مارک شیٹ اور شناختی کارڈ کی کاپی ہمراہ لائیں)۔

منجانب

ناظم مدرسۃ البنات

 

تعارف شعبہ عربی مدرسۃ البنات جامعہ دار العلوم کراچی

مدرسۃ البنات شعبہ عربی میں دو کورس ہوتے ہیں، درسِ نظامی اوردراساتِ دینیہ

 

درسِ نظامی (چھ سالہ کورس):

٭…درسِ نظامی دینی علوم کا ایک بہترین ذخیرہ ہے جس میں تفسیر،حدیث، فقہ اور عربی ادب کے اسباق مدلل پڑھائے جاتے ہیں اس علم کو حاصل کرنے والی طالبہ علوم دینیہ میں پختہ اور راسخ العقیدہ ہوتی ہے۔

٭… درسِ نظامی مکمل کرنے والی فاضلہ مساوی ایم اے ہوتی ہے، اس کے ساتھ ساتھ تجربہ کار معلمات، طالبات کی دینی تربیت اور امور خانہ داری میں سلیقہ مندی کے حصول کیلئے کوشاں رہتی ہیں،جن اوصاف سے متصف ہونا مسلم خاتون کیلئے بیحد ضروری ہے

٭… دورانِ سال سہ ماہی اور ششماہی امتحان جامعہ دار العلوم کراچی کے تحت ہوتا ہے جبکہ سالانہ امتحان وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے تحت ہوتا ہے جس کی باضابطہ سند دیجاتی ہے۔

 

دراساتِ دینیہ (دو سالہ کورس):

٭…دراساتِ دینیہ دو سالہ ایک ایسا کورس ہے جس کا حاصل کرنا ہر مسلم خاتون کیلئے بہت ضروری ہے

٭… اس میں تفسیر قرآن کریم، حدیث، مسائل ِفقہ اور عربی بول چال کی مستند کتابیں پڑھانے کے ساتھ طالبات کی دینی تربیت بھی کی جاتی ہے

٭… ہر سال سہ ماہی، ششماہی امتحان جامعہ دار العلوم کراچی کے تحت ہوتا ہے اور سالانہ امتحان وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے تحت ہوتا ہے جس کی باضابطہ سند دی جاتی ہے۔

 

شرائط داخلہ:

(۱) درسِ نظامی اور دراساتِ دینیہ کیلئے میٹرک پاس

(۲) قرآن کریم ناظرہ باتجوید مکمل پڑھا ہوا ہو۔

(۳) امتحان (ناظرہ: قرآن کریم، تحریری ٹیسٹ : اردو، ریاضی، انگریزی) میں کامیابی

(۴) کلمے، نماز، مسنون دعائیں حفظ یاد ہوں۔

(۵) جامعہ دار العلوم کراچی کے قابل اعتماد کی ضمانت

 

اوقاتِ تعلیم:

صبح ۴۵:۸ تا دوپہر ۲ بجے ، ۲ بجے کے بعد کسی طالبہ کو مدرسہ میں رکنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

 

داخلہ کیلئے ضروری کوائف:

(۱) طالبہ کی شناختی کارڈ یا ب فارم (اصل اور فوٹو کاپی) ، سرپرست کا شناختی کارڈ (فوٹو کاپی)

(۲) تمام تعلیمی سندات (اصل اور فوٹو کاپی)

(۳) سرپرست کا رابطہ نمبر

 

ضوابط:

دورانِ تعلیم طالبات کو مذکورہ امور کی پابندی کرنی ہوگی۔

(۱) اپنی وضع قرآن و سنت کے مطابق بنائیں گی۔

(۲) نماز بر وقت پابندی سے ادا کریں گی۔

(۳) شرعی پردہ کا اہتمام کریں گی۔

(۴) مدرسہ میں غیر حاضری کی صورت میں نگران معلمہ کو بروقت اطلاع دیں گی۔

(۵) دورانِ تعلیم ناظم صاحب کی اجازت کے بغیر عصری علوم یا پرائیویٹ امتحان میں شرکت نہیں کریں گی۔

(۶) معلمہ کو واجبات المدرسیۃ (ہوم ورک)پابندی سے چیک کروائیں گی اور روزانہ سبق یاد کریں گی۔

(۷) مدرسہ کے اوقات کے مطابق محرم رشتہ دار کے ساتھ آئیں گی، نا محرم رشتہ دار کے ساتھ آمد و رفت کی اجازت نہیں۔

(۸) طالبہ کی تعلیم و رخصت سے متعلق کسی قسم کا رابطہ یا معلومات صرف محرم رشتہ دار کرسکتے ہیں، دیگر سے معذرت کیجائے گی۔

(۹) طالبات سے کسی قسم کی فیس نہیں لی جاتی ہے۔

(۱۰) مدرسہ میں موبائل لے کر نہیں آئیں گی۔

(۱۱) منتظمین مدرسہ کو کسی قسم کی شکایت کا موقع نہیں دیں گی۔

 

درسِ نظامی و دراسات کا یونیفارم:

(۱) سفید قمیص، شلوار اور سفید دوپٹہ ہے۔(یونیفارم کے کپڑے سے جسم نہ جھلکتا ہو)۔

(۲) یونیفارم پر کسی قسم کی کڑھائی اور لیس نہ ہو۔

(۳) قمیص کی لمبائی گھنٹے سے دو انچ لمبی ہو۔

(۴) آستین پوری ہو اور چاک بڑے نہ ہوں۔

(۵) یونیفارم میں شلوار شامل ہے، ٹراوزر یا پائجامہ شامل نہیں۔

(۶) سادی چپل یا جوتے استعمال کریں۔

 

طالبات کا برقعہ:

(۱) برقعہ کالے رنگ کا ہو۔

(۲) برقعہ پر کسی قسم کی کڑھائی یالیس نہ ہو۔

(۳) برقعہ ڈھیلا اور ٹخنوںتک ہو۔

(۴) طالبات دستانے اور موزے بھی استعمال کریں۔

(۵) پردے کیلئے طالبات حجاب استعمال کریں۔

منجانب: انتظامیہ مدرسۃ البنات جامعہ دار العلوم کراچی